جمعرات , 29 اکتوبر 2020
ensdur

شاہد خاقان عباسی کی زبان بندی کیلئے نیب کیس بنائے گئے ہیں، سندھ ہائیکورٹ

سندھ ہائیکورٹ نے سابق ایم ڈی پی ایس او شیخ عمران الحق کی غیر قانونی تعیناتی سے متعلق ریفرنس میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی و دیگر کی درخواست ضمانت پر تفصیلی فیصلہ جاری کردیا۔

سندھ ہائیکورٹ کے تحریری فیصلے میں کہا گیا ہے کہ ضمانت قبل از گرفتاری میں یہ ثابت کرنا ہوتا کہ تفتیش بد نیتی پر مبنی ہے اور عدالت محسوس کرتی ہے کہ شاہد خاقان موجودہ وفاقی حکومت پرکھلم کھلا تنقید کرتے ہیں، ان کے خلاف پہلے بھی اسلام آباد میں ریفرنس دائر ہے، وہ 7ماہ جیل میں رہے۔

تحریری فیصلے کے مطابق عدالت نے کہا کہ اس بات کو مسترد نہیں کیا جا سکتا کہ نیب نے سیاسی دباؤ میں لانے کیلئے ریفرنس بنایا، ریفرنس بنانے کا مقصد شاہد خاقان عباسی کی زبان بند کراناہے ، خواجہ برادران کے کیس میں سپریم کورٹ کہہ چکی کہ نیب صرف یک طرفہ کارروائی کررہی ہے۔

یاد رہے کہ 3 ستمبر کو سندھ ہائی کورٹ نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی اور ديگر ملزمان کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) میں شامل کرنے کا حکم دیتے ہوئے عبوری ضمانت کی توثیق کی تھی۔

تعارف Editor

یہ بھی چیک کریں

وزیراعظم عمران خان کی آرمی چیف سے ملاقات

وزیراعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے ملاقات کی ہے، جس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے