ہفتہ , 8 اگست 2020
ensdur

پلوشہ خان کے ساتھ اینکر عمران خان کی بد تمیزی، سوشل میڈیا پر بحث، #BoycottBakeryChannel کا ٹاپ ٹرینڈ بن گیا۔

گرزشتہ روز نجی ٹی وی چینل جی این این پر اینکر عمران خان نے پیپلزپارٹی کی ڈپٹی سیکریٹری اطلاعات پلوشہ خان کو اپنے پرواگرام میں بلاکر ان کی آواز کو بار بار میوٹ کرنے اور بدتمیزی کے ساتھ پیش آنے کے بعد تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا۔ اینکر نے پلوشہ خان کو پروگرام سے چلے جانے کا کہہ دیا۔

اینکر عمران خان نے پلوشہ خان کا موقف لینا چاہا، پلوشہ خان نے بات شروع کی تھی کہ اینکر عمران خان بھڑک اٹھے اور کہا کہ میں سندھ کی وکالت تو کروں گا، سندھ کی وکالت سے نہ تو مجھے پلوشہ روک سکتی ہے، نہ بلاول روک سکتا ہے، نہ زندہ بھٹو روک سکتا ہے۔

پلوشہ خان نے اینکر عمران خان کے جانبدارانہ تجزیئے پر مشورہ دیا کہ آپ پی ٹی آئی کے رہنما فرخ حبیب کی کرسی پر بیٹھ جائیں۔ کیونکہ آپ میری بات سننے سے قبل ہی اپنا جواب دے رہے ہیں، اگر آپ نے مجھے بلایا ہے تو میری بات سن لیں۔

جس پر اینکر عمران خان نے کہا کہ یہ آپکی مرضی ہے۔ آپ میرے اوپر چڑھائی کریں گی تو کیا میں آپکو چڑھنے دوں گا؟ یہ نہیں ہوسکتا۔ آپ سیاسی بات کریں، میرے منہ اتنا لگیں جتنی آپکو ضرورت ہے۔

پلوشہ! یہ بدمعاشی نہیں چلے گی، میں کرنے نہیں دوں گا بدمعاشی۔۔ اگر آپ نے موقف دینا ہے تو دیں، نہیں دینا تو مائیک اتاریں اور چلی جائیں، مجھے کوئی مسئلہ نہیں ہے، اس دوران مسلسل پلوشہ خان کی آواز کو میوٹ کیا گیا اور اینکر مسلسل بولتے رہے۔

اینکر کے جانبدارانہ موقف اور ایک خاتون سیاست دان کے ساتھ روا رکھے جانے والے سلوک کے بعد سوشل میڈیا صارفین کا شدید ردعمل سامنے آیا، صارفین کا کہنا تھا کہ اینکر عمران خان کو یہ نہیں کہنا چاہئے تھا کہ پلوشہ آپ بدمعاشی کررہی ہیں، انہیں تحمل سے بات کرنی چاہئے تھی۔ اینکر عمران خان کے روئیے سے سب سے زیادہ پی پی کے سپورٹرز برسے اور انہوں نے #BoycottBakeryChannel کا ٹرینڈ بھی چلادیا۔ جو پچھلے دس گھنٹون سے پاکستان کا ٹاپ ٹرینڈ بنا ہوا ہے۔ پی پی پی کارکنان اور پیپلزپارٹی کی سیکرٹری اطلاعات نفیسہ شاہ نے اینکر عمران خان اور جی این این سے معافی کا مطالبہ بھی کیا۔

نجی چینل جی این این نے اپنے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ سے ویڈیو کلپ ڈلیٹ کردی ہے، دوسری جانب مسلسل رابطے کے باوجود چینل ابھی تک اپنا موقف پیش نہیں کرسکا ہے۔

تعارف Editor

یہ بھی چیک کریں

مغل اعظم اور پانچ اگست | وسعت اللہ خان

تحریر: وسعت اللہ خان اس پانچ اگست کو بابری مسجد کے ملبے پر رام مندر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے