جمعرات , 28 جنوری 2021
ensdur

وہ نایاب ہے | عادل علی

تحریر: عادل علی

پیپلز پارٹی سے تعلق رکھنے والے محترم جناب جاوید نایاب لغاری نہ صرف نام کے نایاب ہیں بلکہ خود بھی نایاب ہیں۔

ایک باصلاحیت اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان ہونے کے ساتھ ساتھ نہایت ہی ملنسار اور خوش اخلاق شخصیت کے مالک بھی ہیں۔

جاوید نایاب اس وقت پیپلز یوتھ آرگنائیزیشن سندھ کے صدر اور وزیر اعلیٰ سندھ کے اسپیشل اسسٹنٹ بھی ہیں۔

اس بات سے کوئی اختلاف نہیں ہے کہ جاوید نایاب نوجوانوں کے حقیقی ترجمان ہیں اور ایک باصلاحیت کمانڈر بھی۔

صوبے بھر میں پھیلی جیالوں کی یوتھ آرگنائیزیشن کو جس طرح جاوید نایاب آرگنائیز کر رہے ہیں اس کی مثال آپ صوبے بھر میں پیپلز پارٹی کی پوزیشن سے لے سکتے ہیں۔

خواہ کوئی بھی مرحلہ ہو میں نے جاوید نایاب صاحب کو ہر دستہ اول اور اپنی یوتھ فورس کی رہنمائی کرتے ہوئے پایا۔ اتنی بڑی تعداد میں کارکنان کو بلا تفریق مینیج کرنا اور ان کی صلاحیتوں سے مستفید ہونا آسان کام نہیں ہے پر جاوید نایاب اپنی زمیداریاں پوری کرنے میں اپنی مثال آپ ہیں۔

ایسا کوئی دن نہیں گزرا کہ میں نے انہیں کسی کے دکھ درد تو کسی کی خوشی میں شریک ہوتے نہ پایا ہو۔ بلا تفریق رنگ، نسل اور زبان کے صدر صاحب اپنے عہدے کا حق ادا کرتے ہوئے پائے جاتے ہیں اور یہ ہی وجہ ہے کہ قیادت ان کی صلاحیتوں اور خدمات کی معترف بھی ہے۔

صرف یہ ہی نہیں میں اس سے آگے بہت کچھ دیکھتا ہوں!

سیاست کے میدان میں تعلیم اور فنی ترقی کے شعبوں میں انقلابی اقدامات کی ضرورت ہے۔ ہمیں اپنی نوجوان نسل کو آگے لانا ہوگا اور ان کی صلاحیتوں سے فائدہ حاصل کرنا ہوگا۔ میں صدر یوتھ ونگ کی توجہ ایک اہم امر کی طرف لانا چاہونگا کہ وہ سیاسی میدان کے علاوہ بھی نوجوانوں کی تربیت اور ترقی کے لیے عملی اقدامات کریں۔

ہمارے ملک میں اکیڈمک اور کیریئر کاونسلنگ کی اشد ضرورت ہے۔ ہمارے ہاں ٹیلینٹ کی کمی نہیں ہے ہاں پر ہمیں اس ٹیلینٹ کو تراشنے اور پروان چڑھنے کا ماحول پیدا کرنا ہوگا۔

بھیڑ چال زدہ معاشرے میں سروائیو کرنا مشکل ہوتا جا رہا ہے۔ ہمیں اپنی رفتار تیز کرنے کی ضرورت ہے۔

 

بحیثیت صدر یوتھ جاوید نایاب صاحب کی ذاتی دلچسپی اس خلا کو پر کرنے میں بہت اہم کردار ادا کر سکتی ہے اور ساتھ ہی صوبائی حکومت بھی اس معاملے میں اپنا کردار ادا کر کے جونوانوں کا مستقبل سنوار سکتی ہے۔

میری دور رس آنکھ پیپلز پارٹی کا مستقبل نوجوانوں کے سیاست میں آگے آنے سے جڑا دیکھ رہی ہے اور اسی کے ساتھ ملک کی ترقی بھی۔ ساتھ ہی پیپلز پارٹی کے پاس نوجوان اور انتہائی باصلاحیت وزیر برائے امور نوجوان کا آپشن جاوید نایاب لغاری صاحب کی صورت میں موجود ہے ہی اور میرا نہیں خیال کے پیپلز پارٹی اس ہیرے کو جان نہ پائیگی۔۔

تعارف Editor

یہ بھی چیک کریں

جنسی ہراسگی۔۔۔! | سعدیہ معظم

تحریر: سعدیہ معظم میں کوئٹہ شہر کے ایک متوسط گھرانے میں پیدا ہوئی ۔ابو بینک …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے