منگل , 24 نومبر 2020
ensdur

فروری کراچی والوں پر بھاری رہا، قتل، چوری اور ڈکیتی کی سینکڑوں وارداتیں

سی پی ایل سے نے فروری میں ہونے والے جرائم کی رپورٹ جاری کردی ہے، جاری کی گئی رپورٹ کے مطابق  کراچی میں یکم فروری سے انتیس فروری تک مختلف علاقوں میں 18 لوگ جاں بحق ہوئے۔

فروری میں  14 چار وہیلر گاڑیاں چھینی گئی جبکہ 136 چوری کی وارداتیں ہوئیں، پولیس نے کاروائیاں کرکے 50 چوریاں برآمد کی۔ سی پی ایل سی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 202 موٹر سائکلیں چھینی گئی اور 2430 چوری ہوئی جن میں سے 353 برآمد کرائی گئی۔

گزشتہ ماہ کے دوران 1824 موبائیل فونز گن پوائنٹ پر چھینی گئی اور 269 رکور کی گئی۔

سی پی ایل سی رپورٹ کے مطابق فروری کے مہینے میں بھتہ خوری کا کوئی کیس رپورٹ نہیں ہوا اور اغوا برائے تاوان کا بھی کوئی کیس سامنے نہیں آیا،  یکم فروری سے انتیس فروری تک مختلف علاقوں میں بینگ ڈکیتیاں ہوئیں۔ واضح رہے کہ ان دنوں تعینات آئی جی سندھ کلیم امام اور سندھ حکومت میں اختلافات میں شدت پیدا ہوگئی تھی۔

تعارف Editor

یہ بھی چیک کریں

اینٹی انکروچمنٹ میں تعینات خاتون اہلکار کا مرد اہلکاروں پر ہراسانی کا الزام

کراچی میں محکمہ اینٹی انکروچمنٹ میں تعینات خاتون اہلکار نے ادارے کے اکاؤنٹینٹ اور دیگر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے